سلطانؒ کڑپوی اختر مولانا ٹیپو درمدح مثنوی کی ان اور

فدائی راہی ڈاکٹر

Maarif - - اكتوبر معارف -

آندھرا( کڑپہ شہر مصنف کے سلطان ٹیپو مدح در مثنوی

ان اور تھے عصر ہم کے ٹیپو سلطان وه ہیں۔ اختر شاعر نامور کے پردیش) عیاں مثنوی نظر پیش لیے کے ثبوت کے جس تھے بھی مداح بڑے کے

ہے۔ مصداق کے بیاں راچہ ولد خاں محمود بہ معروف خاں علی ذوالفقار گرامی اسم اخترکا ازائی سور قبلہ مشہور کے پٹھانوں افغان تعلق نسبی کا ان تھا۔ خاں گلاب نارائن لچھمی پرداز انشا و ادیب آور قد کے جاہی آصف عہد تھا، سے بھی اطلاع یہ ، رہا حاصل تلمذ شرف انہیں سے ھ) ٢٢٣ المتوفی( شفیق کے ہندوستان محترم استاد کے شفیق نارائن کہ ہے نہیں خالی سے دلچسپی متوفی( بلگرامی آزاد علی غلام شاعر و ادیب محقق، ، مصنف ناز مایہ کیا واعتراف اظہار کا امر اس میں قطعہ ایک اپنے نے اختر ، ہیں ھ) ٢

: قطعہ ہے۔ نارائن لچھمی استاذ صاحبـم و شفیق

بجہاں پارسی و ہندی بہ برد گوے کہ

آزاد حضرت زخدام فیض گرفتہ

یزداں رحمت خاک بآں باد نثار

کا ان ہے ہوتا میں شعراء باکمال کے ٹیپو سلطان عہد شمار اخترکا کا صفحات سو سات دیوان ۔ ہے عدل شاہد کا بات اس دیوان قلمی ضخیم اور قصائد غزلیں، طویل طول ٢٣ میں جس ، ہے ہوئے کیے احاطہ کی دیوان اسی بھی شہید ٹیپو درمدح مثنوی مذکوره ہیں۔ موجود مراثی بلند کے سلطان میں جس ۔ ہے مشتمل پر اشعار ٣ مثنوی یہ ۔ ہے زینت تعریف کی شجاعت و ہمت ، توصیف کی کردار اعلیٰ و اخلاق بنگلور۔

Newspapers in Urdu

Newspapers from India

© PressReader. All rights reserved.