امام اعظم اور اصول حدیث ڈاکٹر محمد ہمایوں عباس شمس

Maarif - - ء ٢٠١٦ دسمبر معارف - چیئرمین شعبہ علوم اسلامیہ، جی سی یونیورسٹی، لاہور۔

اسلامی ہی ہے تو ماخذ بنیادی کا اسلامی شریعت مصطفوی، حدیث فہمی قرآن صرف نہ ارشادات کے آپ ہے۔ بھی اکائی و اساس کی تہذیب رکھنے جاری میں معاشره کو رو کی قرآن بلکہ ہیں کرتے فراہم بنیاد کی میں تعمیر و تشکیل کی رویوں انسانی ہمیشہ معاشره مسلم ہیں۔ بھی ذریعہ کا انحرافی بھی جب میں معاشره ہے۔ لیتا رہنمائی سے اقدس ذات کی پ آ قرآن نے لوگوں بعض کہ تھا یہ سبب بنیادی کا اس تو لیا جنم نے رویوں کرنے ایسا کیا۔ اعلان کا چھوڑنے کو ناطق قرآن میں آڑ کی عمل پر صامت اس یہ کردیا، انداز نظر یکسر نے معاشره مسلم کو معتزلہ قدیم و جدید والے ذات راز کا عظمت و وحدت کی معاشره مسلم کہ ہے ثبوت بین کا بات

ہے۔ مآب رسالت کوششیں سے طر دو لیے کے اشاعت و ترویج کی حدیث علم

سند کیں۔ نے فقہاء جو دوسری اور کیں نے محدثین جو ایک ہیں آتی سامنے کردیے وقف روز و شب نے محدثین لیے کے صیانت و حفاظت کی متن و مسائل استنباط و اخذ سے ان اور مطالب معانی، کے احادیث ان نے فقہاء تو لازوال کے دین خدمت نے دونوں کیں۔ صرف توانائیاں اپنی لیے کے سبک بھی کبھی سے احسانات کے ان امت اور دیے انجام سر کارنامے اول کہ رہا ضرور فر لطیف ایک میں کام کے دونوں ہوسکتی۔ نہیں دوش دکھائی غلبہ کا عملیت پر کام کے الذکر ثانی اور نوعیت علمی کام کا الذکر

کہا نے ترمذی امام لیے اسی ہے۔ دیتا معنی کا حدیث کہ ہیں جانتے بہتر فقہا الحدیث۔ بمعانی اعلم الفقہاء الفاظ ان نے حنبل بن احمد امام تحسین کی کام کے گروه الذکر ثانی ہے، کیا

Newspapers in Urdu

Newspapers from India

© PressReader. All rights reserved.