آثار علمیہ و تاریخیہ حضرت علامہ سید سلیمان ندویؒ

مولوی طلحہ نعمت ندوی

Maarif - - ء٢٠١٨ فروری معارف -

حضرت’’ سید صاحب کا یہ نادر اور تاریخی مضمون ماہنامہ

اتحاد بہار شریف کے سالگره نمبر ء١٩٢٧ میں شائع ہوا تھا اور آج شاید ہی کوئی اس اہم مضمون سے واقف ہو جس میں ان کے خاندانی حالات کی طرف کچھ اشارے بھی آگئے ہیں، راقم کو خدا بخش لائبریری میں اس کا نسخہ ملا اس سے نقل کرکے قارئین کی خدمت میں پیش کیا جارہا ہے، نیز فارسی اقتباس کا ترجمہ بھی کردیا گیا ۔ہے‘‘

طلحہ نعمت صوبہ بہار کے زیدی سادات جو کسی قدر دیسنہ اور تمام تر مسیاں

اور باره گانواں یا( باره گیاں) میں آباد ہیں ، ان کے مور اعلیٰ کا نام سید حسین اور لقب خنگ’’ سوار‘‘ شایدہے، بہت کم لوگ ان بزرگ کے حالات اور ان کے مزار کی کیفیت سے واقف ہوں۔ میرا نانہالی خاندان بھی مسیاں کے سلسلہ سے زیدی ہے اور انہیں بزرگ تک پہنچتا ہے ۔اس لیے قدرتاًان کے مزار کے دیکھنے کا شوق غالب تھا، اس لیے آج سے ستره برس سے کچھ زیاده ہوا جب، پہلی دفعہ اجمیر جانے کا اتفاق ہوا اور شوق باطنی کشاں کشاں اس پہاڑ پر بھی لے گیا جس پر ان کا مزار واقع ہے، وہاں عمارتونپر جو کتبے لگے ہیں وه بھی نقل کرلیے تھے، مگر اس وقت سے آج تک وه یوں ہی پڑے رہے۔ مدیر اتحاد کا ممنون ہوں کہ انہوں نے اپنے اخبار کے خاص نمبر کے لیے بہار کے تعلق سے ایک علمی مضمون کی فرمائش کی، اس موقع کے لیے مجھے اس سے زیاده کوئی قیمتی تحفہ اپنے ہم نسب سادات اوراہل وطن کے لیے کوئی دوسرا نظر نہ آیا کہ اس

بہانہ سے ایک مدت کی پڑی ہوئی چیز تکمیل کو پہنچتی ہے۔ حضرت سید حسین خنگ سوار حضرت زید شہید بن امام زین استھانواں بہارشریف۔ حضرت حسین خنگ سوار اور ان کا مزار واقع اجمیر

Newspapers in Urdu

Newspapers from India

© PressReader. All rights reserved.