مکتوب ریاض

Maarif - - ء٢٠١٨ مارچ معارف -

ریاض، سعودی عرب ؍٢٨ جمادی الاولی ھ١ ٣٩ محترم مدیر ماہنامہ معارف

السلام علیکم ورحمۃ لله وبرکاتہ

گذشتہ شمارے میں کمال الدین دمیری کی کتاب حیا الحیوان

الکبری پر جو مضمون چھپا ہے اس میں قرآن مجید کی ایک آیت غلط نقل ہوئی ہے اور یہ غلطی مضمون نگار کی ہے۔ پہلے انہوں نے دمیری کے حوالے سے یہ لکھا کہ لفظ بدنۃ کی جمع بُدُن دال کے پیش کے ساتھ قرآن میں بھی ئیآ ہے پھر چند سطروں کے بعد سوره حج کی یہ آیت اس طرح نقل کی ہے: والبُدُن جعلناہا لکم من شعائر لله

یعنی البدن کی دال پر پیش لگایا ص( ۔)١٢٣ حالانکہ دمیری نے یہ

لکھا تھا کہ لفظ بدنۃ کی جمع بُدُن دال( کے پیش کے ساتھ) اور بُدْن دال( کے سکون کے ساتھ) دونوں تیآ ہے، البتہ قرآن میں سکونِ دال کے ساتھ آئی ہے۔ دمیری کے اصل الفاظ ملاحظہ ہوں: البَدَنۃ جمعہا : بُدن، بضم الدال وإسکاتہا، وبالإسکان جاء القرآن۔

(٣٨ ص ،١ جلد ھ،١ ٢ دمشق دارالبشائر( کا ایک صرف سے میں جمعوں دونوں تو اول نے نگار مضمون قرآن کو اسی نہیں ہی آئی میں قرآن جو جمع وه کہ کیا یہ ستم پھر کیا، ذکر حافظ کے معارف کردی۔ نقل مطابق کے اسی بھی آیت اور کیا منسوب سے

ہوتی! دی توجہ پر غلطی اس کاش نے مرتب قرآن گیا لکھا کچھ جو پر حالات کے دمیری میں مضمون اور، بات ایک

اس ہے، خلاف کے نہج کے معارف طریقہ یہ ہے۔ حوالہ بلا سب وه ہے کی معلومات وه کہ تھا کرنا تقاضا سے نگار مضمون قبل سے اشاعت لیے اصل سامنے کے ان کہ ہے یہ وجہ کی دینے نہ حوالہ کریں۔ اہتمام کا توثیق لاہور اسلامیات ادارهٔ مطبوعہ ترجمہ اردو کا اس بجائے کے کتاب عربی اصل ہیں۔ ماخوذ سے مقدمے کے کتاب مترجم معلومات ساری یہ اور ہے، کرلینے اعتماد پر ترجمے اردو محض اور کرنے نہ رجوع جانب کی مآخذ قرآنی مگر ہیں ہوگئی پیدا بھی اور خرابیاں کئی میں مضمون سے وجہ کی دلانا توجہ جانب کی اس لیے اس تھا، سنگین معاملہ کا غلطی میں آیت اداره( اڈیشن جو کا ترجمے مذکوره کہ رہے واضح ہوا۔ معلوم ضروری ہوئی نقل درست آیت میں اس ہے نظر پیش میرے ء)١٩٩٢ لاہور اسلامیات ہے۔ صحیح الجملہ فی اور مکمل بھی ترجمہ کا عبارت کی دمیری اور ہے

والسلام

اصلاحی اجمل محمد مولانا

Newspapers in Urdu

Newspapers from India

© PressReader. All rights reserved.